Home / General / کینٹن میلے میں چین کے مواقع سے مستحکم تعلق استوار کر کے فائدہ اٹھائیں

کینٹن میلے میں چین کے مواقع سے مستحکم تعلق استوار کر کے فائدہ اٹھائیں

چین کا سب سے بڑا تجارتی میلہ مندی کے عالمی اقتصادی رحجان سے نمٹنے میں اہم کردار کا حامل

گوانگ چو، چین، یکم اپریل 2012ء/پی آرنیوزوائر-ایشیا/–

جیسا کہ امریکہ اور یورپ اقتصادی غیر یقینی کی کیفیت سے نمٹ رہے ہیں، کینٹن میلہ تجارتی مواقع اور کاروبار کے لیے نئے علاقے چاہنے والے غیر ملکی کاروباری اداروں کے لیے کہیں زیادہ ضروری پلیٹ فارم بن چکا ہے۔

(وڈیو: http://www.multivu.com/mnr/55419-tap-into-the-china-opportunity-at-the-canton-fair)

(تصویر: http://www.prnasia.com/sa/2012/02/15/201202151945196456.jpg)

کینٹن میلہ چین کا سب سے بڑا تجارتی میلہ ہے، جو ہر سال چین کے بہترین ساخت گروں اور 50 سے زیادہ ممالک کے 2 ہزار سے زائد غیر ملکی اداروں کو اپنی جانب کھینچتا ہے، جن میں امریکہ، جاپان، جرمنی،اطالیہ اوربرطانیہ شامل ہیں۔ عالمی اقتصادی بحران کے جواب میں، میلے نے حالیہ سالوں سے اب تک غیر ملکی و چینی کاروباری اداروں، اور ساتھ ساتھ خریداروں کے لیے نئے مواقع پیش کیے ہیں۔

چین کے نائب وزیر برائے تجارت چونگ شان نے اپنی ایک حالیہ تقریر میں کہا کہ “تشکیل نو سے گزرنے والی عالمی معیشت تجارت کے لیے بھی مواقع پیش کرتی ہے۔  کینٹن میلے کے لیے تیاری کے دوران ہم نے سائنسی پیشرفت اور ‘تیز رفتار ترقی، تجارتی ڈھانچے کی ترتیب اور تجارتی توازن کے فروغ’ کی پالیسی  کے تصور کو اپنایا ہے تاکہ مواقع کا فائدہ اٹھایا جائے اور چیلنجز سے نمٹا جائے۔”

کینٹن میلے کا 111 واں سیشن غیر ملکی کاروباری اداروں کے لیے ایک بہت ہی مثالی وقت پر منعقد ہوا ہے کیونکہ چینی حکومت نے بھی اپنے 12 ویں پنج سالہ منصوبے کے حصے کے طور پر زیادہ مساوی تجارتی توازن کو حاصل کرنے کے لیے درآمدات میں اضافے کا فیصلہ کیا ہے۔

حکم پر ایئرکنڈیشننگ یونٹ تیار کرنے والے اطالوی ادارے فوچاکا ٹیک کے مالک لوئیگی کاپریتو کہتے ہیں کہ بطور خریدار ایک سال دورہ کرنے کے بعد 2004ء کینٹن میلے میں پہلی بار نمائش میں حصہ لینے کے بعد سے ان کے کاروبار میں زبردست اضافہ ہوا ہے۔ وہ کہتے ہیں کہ “کینٹن میلہ مجھے کئی چینی پراپرٹی ڈیولپمنٹ کمپنیوں، ماہرین تعمیرات اور ڈیزائنرز کے ساتھ رابطے میں رکھتا ہے اور اب ہم چین میں ساخت گری تک کر سکتے ہیں۔”

غیر ملکی خریداروں کو بھی میلے میں چینی کاروباری اداروں کے ساتھ منسلک ہونے کے کئی مواقع ملیں گے۔ اسپیکٹرا سینا انکارپوریٹڈ کے صدر رابرٹ زیڈ کیو بی نے کہا کہ انہوں نے پہلی بار 1994ء میں نمائش میں شرکت کی اور اب خریدار کی حیثیت سے تقریباً 50 ملین ڈالرز کی مالیت کا کاروبار کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ “صرف 15 دنوں میں ہم چین میں اسمبل کی گئی بہترین مصنوعات دیکھ سکتے ہیں، جس سے ہمیں ایسا محسوس ہوتا ہے جیسے ہم نے پورا چین گھوم لیا۔”

کینٹن میلے کا 111 واں سیشن 15 اپریل سے 5 مئی تک گوانگ چو، چین میں چائنا امپورٹ اینڈ ایکسپورٹ فیئر کمپلیکس میں ہوگا۔

مزید معلومات کے لیے ملاحظہ کیجیے: http://www.cantonfair.org.cn

ذریعہ چائنا فارن ٹریڈ سینٹر (CFTC)

رابطہ: جناب وو سیاؤینگ، +86-20-8913 8628، xiaoying.wu@cantonfair.org.cn

Leave a Reply

Scroll To Top